نومبر 22, 2019

غزنی،خوست وپروان،5اہلکارہلاک،ایک سرنڈر

غزنی،خوست وپروان،5اہلکارہلاک،ایک سرنڈر

امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے غزنی اور خوست صوبوں میں کٹھ پتلی دشمن کو نشانہ بنایا، جبکہ صوبہ پروان میں ایک فوجی مخالفت سے دستبردار ہوا۔

اطلاعات کے مطابق جمعہ کے روز صبح کے وقت صوبہ غزنی کےصدرمقام غزنی شہر کے روضہ کے علاقے میں کوتل نامی فوجی مرکز کی دفاعی چوکی پر ہونے والے حملے میں 2 اہلکار ہلاک ہوئے اور رات کے وقت ضلع مقرکے مدو کے علاقے میں جنگجوؤں کی چوکی پر حملے کے دوران ایک اہلکار زخمی ہوا،جب کہ جمعرات کےروز شام کے وقت ضلع د ہ یک کے یونٹ کے مقام پر فوجی مرکز پر مجاہدین نے میزائل داغے اور جمعہ کےروز صبح کے وقت ضلع شلگر کے یرگٹو کےعلاقے میں سیکورٹی فورسز پر حملہ کیا۔

ذرائع کے مطابق دونوں حملوں میں دشمن کو ہلاکتوں کا سامنا ہوا،لیکن تفصیل فراہم نہ ہوسکی۔

رپورٹ کے مطابق جمعہ کےروز دوپہر کے وقت صوبہ خوست ضلع موسی خیل کے دوہ مندہ کے مقام پر حکمت عملی کے تحت ہونے والے دھماکہ نے 3 فوجیوں کی جان لی۔

دوسری جانب صوبہ پروان ضلع کوہ صافی کے مندیقول گاؤں کے رہائشی افغان فوجی عجب گل ولد محمد کبیر نے حقائق کا ادراک کرتے ہوئے مخالفت سے دستبردار ہوا۔

Related posts