نومبر 16, 2019

کمانڈو کے حملے پسپا،ٹینک و گاڑیاں تباہ، ہلاکتیں

کمانڈو کے حملے پسپا،ٹینک و گاڑیاں تباہ، ہلاکتیں

امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے بغلان،بلخ، میدان،ننگرہار اور کاپیسا صوبوں میں دشمن کو نشانہ بنایا۔

اطلاعات کے مطابق گذشتہ کئی روز سے صوبہ بغلان ضلع پل خمری کے  مختلف علاقوں پر کٹھ پتلی انتظامیہ کی سیکورٹی اہلکار مثلا کمانڈو،پولیس،جنگجو،فوجی اور صفریک نامی فورسز  فضائیہ کے ہمراہ مجاہدین پر حملے کررہے ہیں،جنہیں بار بار اللہ تعالی کی نصرت سےمجاہدین کی شدید مزاحمت سامنا ہوتا ہے اور دشمن ہر بار جانی و مالی نقصانات اٹھاتے ہی فرار کی راہ پناتا ہے۔

دوسری جانب جمعہ اور سنیچر کی درمیانی شب صوبہ بلخ ضلع چاربولک کے سبزی کار کے علاقے میں فوجی بیس پر ہونے والے حملے میں 2 اہلکار ہلاک اور سنیچر کےروز صبح کے وقت ضلع خاص بلخ کے بنگلہ کے مقام پر پولیس بیس پر اسی نوعیت حملے میں ایک اہلکار قتل ہوا۔

رپورٹ کے مطابق جمعہ کےروز شام کے وقت صوبہ میدان ضلع سیدآباد کے بدہکی ،عزیزقلعہ اور دیگر علاقوں میں مجاہدین نے فوجی کانوائے پر حملہ کیا،جس کے نتیجے میں ایک ٹینک اور 5 گاڑیاں تباہ ہونے کے علاوہ دشمن کو ہلاکتوں کا سامنا بھی ہوا۔

اسی طرح سنیچر کےروز صبح کے وقت صوبہ ننگرہار ضلع غنی خیل کے نہرنمبر25 کے علاقے میں بم دھماکے سے 2 فوجی ہلاک جب کہ متعدد زخمی ہوئے اور بعد میں تازہ دم اہلکاروں کی گاڑی دھماکہ خیز مواد سے تباہ اور اس میں سوار 4 اہلکار ہلاک و زخمی ہوئے۔

نیز عشاء کے وقت صوبہ کاپیسا ضلع تگاب کے جنگی اور انارجوئے کے علاقوں میں مجاہدین کے حملوں میں ایک جنگجو ہلاک جب کہ دوسرا زخمی ہوا۔

Related posts