اکتوبر 20, 2019

قندوزوبغلان،14 فوجی اسلحہ سمیت سرنڈر،13 ہلاک

قندوزوبغلان،14 فوجی اسلحہ سمیت سرنڈر،13 ہلاک

امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے صوبہ قندوز میں دشمن پر حملہ کیا، جب کہ صوبہ بغلان میں سیکورٹی اہلکاروں نے مجاہدین کے سامنے ہتھیار ڈال دیے۔

موصولہ رپورٹ کے مطابق اتوار اور پیر کی درمیانی شب صوبہ قندوز ضلع قلعہ ذال کے مرکز اور پولیس ہیڈکوارٹر پر مجاہدین نے حملہ کیا، جس کے نتیجے میں 13 اہلکار ہلاک جب کہ 7 زخمی ہوئے اورساتھ ہی ضلع امام صاحب کے اسماعیل قشلاق کے مقام پر چوکی پر ہونے والے حملے میں چوکی فتح اور وہاں تعینات اہلکار فرار ہوئے اور مجاہدین نے ایک ہیوی مشین گن،ایک راکٹ لانچر، ایک امریکی گن وغیرہ بھی قبضے میں لیا۔

رپورٹ کےمطابق پیر کےروز دوپہر کے وقت صوبہ بغلان ضلع مرکزی بغلان کے شاہی خیل خوگراو بیس میں تعینات 14 سیکورٹی اہلکاروں نے حقائق کا ادراک کرتے ہوئے مجاہدین کے سامنے ہتھیار ڈال دیے، جنہوں نے 6 عدد کلاشنکوفیں، 2 امریکی گنیں،ایک روسی ہیوی مشین گن، ایک راکٹ،3 امریکی رائفلیں اور کافی مقدار میں فوجی سازوسامان بھی مجاہدین کے حوالے کردیا۔

دوسری جانب پیر کےروز صبح کے وقت مذکورہ ضلع کے گلدریان کے علاقے میں مجاہدین نے کاروائی کا آغاز کرتے ہوئے تمام علاقے سے دشمن کا صفایا کروایا۔

Related posts