اکتوبر 20, 2019

روزگان،زابل وغورکاروائیاں، کمانڈر سمیت 19 ہلاک

روزگان،زابل وغورکاروائیاں، کمانڈر سمیت 19 ہلاک

امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے روزگان، زابل اور غور صوبوں میں فوجی کاروان اور چوکیوں کو نشانہ بنایا۔

اطلاعات کے مطابق جمعرات کےروز صوبہ روزگان کے صدر مقام ترینکوٹ شہر کے نچین کے علاقے میں مجاہدین نے جنگجو کمانڈر مولاداد لیزری کو محافظ سمیت قتل کردیا اور ان کے اسلحے کو قبضے میں لیا،جب کہ رات کے وقت ضلع چورہ کے قلعہ راغ کے علاقے میں پولیس چوکی اور تازہ دم اہلکاروں پر ہونے والے حملے میں 5 اہلکار ہلاک ہوئے، جب کہ ضلع دہراود کے کورٹ کان نامی چوکی پر رات کے وقت مجاہدین کے حملے میں 2 فوجی قتل ہوئے۔

صوبہ زابل سے اطلاع ملی ہےکہ جمعہ اور سنیچر کے  روز ضلع شہرصفا کے سوختہ ماندہ،اسحاق زئی ماندہ اور شنہ کے علاقوں میں فوجی کاروان اور چوکیوں پر ہونے والے حملوں میں ایک ٹینک اور ایک گاڑی تباہ ہونے کے علاوہ 7 اہلکار بھی ہلاک ہوئے۔

رپورٹ کے مطابق رات کے وقت صوبہ غور ضلع پسابند کے مرکز کے قریب آبک نامی چوکی پر مجاہدین نے حملہ کرکے اللہ تعالی کی نصرت سے اس پر قابض ہوئے اور وہاں تعینات اہلکاروں میں سے ایک ہلاک جب کہ 2 زخمی اور دیگر فرار ہوئے اور مجاہدین نے ایک راکٹ، ایک پستول اور ایک موٹرسائیکل بھی غنیمت کرلی۔دریں اثناء پائے غار نامی چوکی پر مجاہدین کے حملے میں 2 فوجی ہلاک جب کہ 2 زخمی اور ایک کلاشنکوف بھی مجاہدین نے قبضے میں لیا۔

Related posts