نومبر 19, 2019

قندوز، عوامی حمایت کی ایک اور تصویر

قندوز، عوامی حمایت کی ایک اور تصویر

آج کی بات

گزشتہ رات امارت اسلامیہ کے غیور مجاہدین نے قندوز شہر پر چار اطراف سے حملہ کیا اور شہر کے مختلف حصوں میں متعدد چوکیاں اور فوجی اڈے فتح کر لیے۔ دشمن کو بھاری جانی اور مالی نقصان پہنچا ہے۔ جب کہ بھاری مقدار میں اسلحہ بھی غنیمت میں ملا ہے۔ تاہم دشمن نے اپنی عادت کے مطابق شہر کے متعدد علاقوں پر بمباری کی اور مظلوم لوگوں کو جانی و مالی نقصان پہنچایا۔ قندوز شہر پر حالیہ حملے، پیش رفت اور دیگر علاقوں میں حالیہ فتوحات، خصوصا امریکی فوج پر میزائل اور فدائی حملے مجاہدین کی بہترین پیش قدمی کی نشان دہی کرتے ہیں۔ مجاہدین کے وسائل مشترکہ دشمن کے وسائل سے بہت کم ہیں۔ وسائل کے لحاظ سے کمزور مجاہدین نے جدید ہتھیاروں سے لیس دشمن پر بالادستی حاصل کی ہے۔ یہ صرف اللہ تعالی کی مدد اور مجاہد عوام کے بھرپور تعاون کا نتیجہ ہے۔ مجاہدین مزید بھی اللہ تعالٰی کا شکر ادا کریں۔ اس کے احکامات پر لبیک کہیں۔ اس کے منکرات سے سختی سے پرہیز کریں۔ نیز اپنے مظلوم و مجاہد عوام کی شب و روز خدمت کریں۔ انہیں معاشی، تعلیمی اور معاشرتی شعبوں میں ضروری سہولیات فراہم کریں۔ انہیں روزمرہ کے معاملات کے لیے اطمینان بخش ماحول مہیا کریں۔

حالیہ حملوں سے حملہ آوروں کو یہ پیغام دیا گیا ہے کہ وہ جتنا بھی تشدد اور طاقت کا استعمال کریں، وہ فتح نہیں حاصل کر پائیں گے۔ یہ بات روز روشن کی طرح عیاں ہے کہ کئی سلطنتوں کو شکست دینے والے عوام امارت کی حمایت میں کھڑے ہیں۔ تاریخ نے ثابت کیا ہے کہ افغان عوام اپنی دھرتی، اقدار اور ملی منافع کے دفاع کے لیے پرعزم ہیں۔ وہ اپنے موقف سے ہرگز دست بردار نہیں ہوں گے۔ اگر حملہ آوروں کے خلاف صرف مٹھی بھر افراد برسرپیکار ہوتے تو اس قدر طویل اور تاریخی مزاحمت ممکن نہ ہوتی۔

حالیہ فتوحات نے ایک بار پھر واشنگٹن کے محافظوں (کابل انتظامیہ) کو دکھا دیا ہے کہ وہ قابض فوج کی حمایت میں ذلیل و خوار اور ناکام ہو جائیں گے۔ آخرت میں اسلام کے ظاہری دشمنوں کی صف میں شامل ہوں گے۔ امارت اسلامیہ ایک بار پھر کابل انتظامیہ کو دعوت دیتی ہے کہ وہ حملہ آوروں کی حمایت سے دست بردار ہو کر امارت اسلامیہ کی صف میں شامل ہو جائے۔ امارت اسلامیہ نے ایسے تمام لوگوں کے لیے عام معافی کا اعلان کیا ہے اور انہیں جان و مال کی حفاظت کی ضمانت دی ہے۔

Related posts