اکتوبر 16, 2019

صوبہ فراہ کے گورنر  شہید ملا فضل الرحمن کی شہادت پر امارت اسلامیہ کا پیغام

صوبہ فراہ کے گورنر  شہید ملا فضل الرحمن کی شہادت پر امارت اسلامیہ کا پیغام

اللہ تعالی کی راہ میں قربانیوں کے سلسلے میں امارت اسلامیہ کے صوبہ فراہ کے گورنر جناب شہید ملا فضل الرحمن (ملامشراخوند) جمعہ کے روز مغرب کے وقت امریکی استعمار کے بزدلانہ حملے میں شہادت کے اعلی مقام پر فائز ہوئے۔ اناللہ وانآ الیہ راجعون

اللہ تعالی فرماتے ہیں  : مِّنَ الْمُؤْمِنِينَ رِجَالٌ صَدَقُوا مَا عَاهَدُوا اللَّـهَ عَلَيْهِ فَمِنْهُم مَّن قَضَى نَحْبَهُ وَمِنْهُم مَّن يَنتَظِرُ  وَمَا بَدَّلُوا تَبْدِيلًا ﴿٢٣﴾ الاحزاب

ترجمہ :مؤمنوں میں کتنے ہی  ایسے شخص ہیں کہ جو اقرار انہوں نے اللہ سے  کیا تھا اس کو سچ کر دکھایا پھر ان میں بعض ایسے ہیں جنہوں نے اپنی نذر پوری کردی  یعنی جان دیدی  اور بعض ایسے ہیں کہ انتظار کررہے ہیں۔ اور  انہوں نے اپنے فعل کو ذرا بھی نہیں بدلا ۔

شہید ملا فضل الرحمن تقبلہ اللہ تعالی امارت اسلامیہ کے ایک نڈر، باہمت اور دلیر رہنماؤں میں سے تھے،جنہوں نے اللہ تعالی کی راہ میں عظیم اور ناقابل فراموش قربانیاں دیں۔

شہادت ہمارے لیے فخر ہے، امارت اسلامیہ کی عظیم بنیاد اس طرح مقدس اور سرفروش شہداء کے خون پر رکھی  گئی ہے اور لہو ہی سے جاری رہیگا۔ان شاءاللہ

شہید ملا فضل الرحمن (ملامشر) کی شہادت کے حوالے سے ہم تمام افغان ملت،فراہ کے مجاہدین، ان کے تمام قریبی ساتھیوں، متعلقین اور خاندان کو دل کی گہرائیوں سے تسلیت پیش کرتے ہیں۔

ہماری ان بےدریغ قربانیوں کی برکت سے اللہ تعالی افغانستان سے جارحیت کو ختم کردیگا، فساد کا خاتمہ ہوگا اور یہاں محمدی شریعت کے مطابق اسلامی نظام نافذ ہوگا۔ ان شاءاللہ

بزدل دشمن کو امارت اسلامیہ  یاد دلاتی ہے کہ اللہ تعالی کی راہ میں شہادت امارت اسلامیہ کے ہر رہنما اور عام فرد کی عظیم آرزو ہے،  ہم قربانیوں سے کبھی تھک سکتے اور نہ ہی  شہادت ہمیں کھبی اپنے شرعی مسیر سے دستبردار نہیں کرسکے گا، بلکہ ہماری آرزو ؤں کو مزید قوی تر کرینگے اور ہم  بلند حوصلے و متانت سے اپنے جہاد کو جاری رکھیں گے۔ ان شاءاللہ تعالی

تمہارا محاسبہ غلط ہے، کہ گویا ہمارے رہنماؤں کی شہادت سے تم کوئی فائدہ کو حاصل کرسکوگے، یا اپنے مذموم مقاصد تک پہنچ پاؤگے، گذشتہ سالوں کے تجربات نے ثابت کردیا ہے کہ کسی قائد کی شہادت سے جہادی صف میں کمزوری نہیں آئی ہے، بلکہ اللہ تعالی کی نصرت آں پہنچی ہے اور مجاہدین کے جہادی جذبات اور حوصلے بلندتر ہوچکے ہیں۔

امارت اسلامیہ افغانستان

02 ذی الحجہ 1440 ھ بمطابق 03  اگست 2019ء

Related posts