خبردار! امریکی مفادات کے محافظ

آج کی بات

امارت اسلامیہ کے مجاہدین پورے ملک میں امریکی اور کٹھ پتلی فوج کے خلاف مختلف منصوبوں کے تحت کارروائیاں کر رہے ہیں۔ مجاہدین کے ہلاکت خیز حملوں نے دشمن کو بوکھلا دیا ہے۔ دشمن اتنا حواس باختہ ہے کہ ہر واقعے پر متضاد موقف پیش کرتا ہے ۔ کابل، غزنی ، قندھار ، ہلمند ، فراہ ، بادغیس ، فاریاب ، بغلان ، بدخشان ، پروان ، پکتیا ، میدان میدان ، لوگر ، زابل اور دیگر صوبوں میں مشترکہ دشمن پر حالیہ حملوں نے ایک بار پھر ثابت کیا ہے کہ امارت اسلامیہ کے مجاہدین کسی بھی وقت اپنے اہداف کو نشانہ بنا سکتے اور تباہ کر سکتے ہیں ۔ مزید یہ کہ ان حملوں سے یہ بھی ثابت ہوا کہ امریکی مفادات کے تحفظ کے لیے اپنی قوم پر مظالم کے پہاڑ توڑنے والی کابل فوج مجاہدین کے انتقام سے نہیں بچ سکتی۔ اس قوم کے بہادر مجاہدین سفاک دشمن کو اُس کے محفوظ ٹھکانوں میں منطقی انجام تک پہنچائیں گے ۔

مجاہدین کی نئی حکمت عملی اور کامیاب حملوں سے دشمن خوف زدہ اور پریشان ہے۔ حتی کہ وہ کابل میں اپنے مراکز کا دفاع نہیں کر سکتا۔ مجاہدین ملک کے طول و عرض میں ہر روز فتوحات حاصل کرتے ہیں۔ اضلاع اور فوجی اڈے فتح کرتے ہیں۔ دشمن کے اہل کار جوق در جوق مجاہدین کے سامنے ہتھیار ڈال رہے ہیں۔ جو اہل کار لڑنے پر بضد ہیں، وہ مجاہدین کے حملوں کے خوف سے فرار ہو رہے ہیں یا وہ بھی نشانہ بن رہے ہیں۔ امارت اسلامیہ نے بار بار امریکا اور کابل انتظامیہ کے ساتھ مل کر کام کرنے والے شہریوں کو یقین دلایا ہے کہ اسلام اور ملک کے خلاف جنگ سے دست بردار ہو کر پرامن زندگی بسر کریں۔ آپ کو جان و مال کی حفاظت کی ضمانت دی جائے گی۔ اسلامی اقدار اور قومی مفادات کے دفاع کے لیے آگے بڑھیں۔ امارت اسلامیہ کی قیادت میں اسلام کی خدمت کریں۔ تاکہ اپنا دینی فریضہ بھی ادا کریں اور افغانستان کو بھی قابض فوج کے قبضے سے آزاد کرائیں۔ تاکہ یہاں اسلامی نظام نافذ کیا جا سکے۔

امارت اسلامیہ ایک بار پھر امریکا اور کابل انتظامیہ کے ساتھ کام کرنے والے اہل کاروں پر زور دیتی ہے کہ وہ دشمن کی غلامی چھوڑ کر اسلام اور ملک کے دفاع کے لیے مجاہدین کی مدد کریں۔ سب مل کر ملک اور مظلوم قوم کو قابض دشمن کے ظلم سے نجات دلائیں ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*