دسمبر 11, 2019

امریکی چھاپے وحملے، خواتین سمیت11 شہید، 14 گرفتار

امریکی چھاپے وحملے، خواتین سمیت11 شہید، 14 گرفتار

جارح امریکی و کٹھ پتلی فوجوں نے غزنی، ننگرہار، بلخ اور کنڑ صوبوں میں نہتے شہریوں کو ڈرون حملوں کا نشانہ بنانے کے علاوہ ان کے گھروں پر چھاپے مارے اور لوٹ مار کی۔

اطلاعات کے مطابق سنیچراور اتوار کی درمیانی شب صوبہ غزنی ضلع قرہ باغ کے بگی خیل، یارکی خیل اور کلے خیل گاؤں پر جارح امریکی و کٹھ پتلی کمانڈو نے چھاپہ مار کر ایک مسجد کو منہدم، 3 شہریووں کو شہید، 3 کو حراست میں لینے کے علاوہ متعدد گاڑیوں کو نذرآتش کردیا اور گامیشک کے علاقے میں امریکی ڈرون حملے میں  ایک شخص شہید ہوا۔

دریں اثناء صوبہ ننگرہار ضلع سرخ رود  کے چمتلی کے علاقے میں وحشی دشمن نے اسی نوعیت کا چھاپہ مار دو بھائیوں کو شہید کردیا۔

دوسری جانب رات کے وقت وحشی غاصب اور کٹھ پتلی فوجوں نے صوبہ بلخ ضلع چاربولک کے ثوریان کے مقام پر ہلہ بول دیا، عوام کو مالی نقصان پہنچانے کے علاوہ 6 افراد کو بھی حراست میں لیا اور ضلع چاہی کے خان آباد کے علاقے کو کٹھ پتلی فوجوں نے توپوں کا نشانہ بنایا،جس کے نتیجے میں عوام کو مالی نقصان پہنچنے کے علاوہ 2 خواتین بھی شہید ہوئیں۔

رپورٹ کے مطابق سنیچر کے روز شام کے وقت جارح امریکی و کٹھ پتلی فوجوں نے صوبہ بدخشان ضلع کران ومنجان کے مربوعلاقے پر شدید بمباری کی،جس کے نتیجے میں مدرسہ تباہ ہونے کے علاوہ مسجدامام اور ایک مدرس بھی شہید ہوا۔

صوبہ کنڑ سے اطلاع ملی ہےکہ رات کے وقت ضلع دانگام کے تارکور کے علاقے پر وحشی صلیبی فوجوں اور کمانڈو نے شب خون مار کر ایک شخص کو شہید جب کہ ایک شخص اور پانچ بچوں کو حراست میں لیا۔

اناللہ وانآ الیہ راجعون

Related posts