مارچ 09, 2021

دعوت وحملے: بلڈوزر تباہ، 3 اہلکار ہلاک 30 سرنڈر

دعوت وحملے: بلڈوزر تباہ، 3 اہلکار ہلاک 30 سرنڈر

فاریاب، ہرات وبادغیس صوبوں میں کٹھ پتلی فوجیوں پر حملہ، جبکہ صوبہ قندہار ضلع ارغنداب میں 30 اہلکاروں نے مجاہدین کے سامنے ہتھیار ڈالے۔

اطلاعات کے مطابق گزشتہ چند دنوں میں صوبہ قندہار کے ارغنداب، ژڑئی، ڈنڈ اور پنجوائی اضلاع میں 30 اہلکاروں عبد القادر ولد لالی، نقیب الله ولد سید محمد، عبد الاحد ولد خیر محمد، علي محمد ولد حاجي گل محمد، محمد صادق ولد عبد المناف، محمد اسلم ولد محمد کرم، محب الله ولد محمد نبي، محمد عالم ولد محمد هاشم، محمد صادق ولد عبد الحمید، محمد یعقوب ولد حاجي ظاهر، نصیب الله ولد توکل، محمد طاهر ولد ولي جان، نصر الله ولد محمد رفیق، رحیم الله ولد راز محمد، عبد القاهر ولد ولي جان، قدرت الله ولد داد محمد، فدا محمد ولد حبیب الله، سفر احمد ولد نور احمد، نعمت الله ولد فیض الله، احسان الله ولد طالب اغا، عزیز الله ولد نور الحق، نقیب الله ولد سید محمد، اغا ولي ولد گل محمد، نیاز محمد ولد محمد، امیر محمد ولد عبد الرشید، لعل محمد ولد اختر محمد، محمد ولد سید غلام، نعمت الله ولد اختر محمد، عبد القوی ولد عبد الرشید اور محمد حسین ولد محمد خان) نے مجاہدین کی مخالفت سے دست برداری کا اعلان کیا۔

اطلاع کے مطابق سنیچر کے روز سہ پہر دو بجے کے لگ بھگ صوبہ ہرات ضلع شینڈنڈ کے زاول حلقہ کے علاقے میں دشمن پر حملہ ہوا، جس سے ایک فوجی ہلاک، جبکہ دوسرا زخمی ہوا۔

آمدہ رپوٹ کے مطابق اتوار کے رات صوبہ فاریاب ضلع المار کے مرکز میں مجاہدین کے حملے کے نتیجے میں دشمن کی بلڈوزر گاڑی تباہ ہوئی۔

موصولہ رپوٹ کے مطابق صوبہ بادغیس ضلع مقر میں مجاہدین نے ایک فوجی گل احمد ولد نور محمد گرفتار کرکے ان کے مقدمہ شرعی عدالت کے حوالے کردیا۔ اور سنیچر کے روز عصر چار بجے کے لگ بھگ مذکورہ ضلع کے مرکز کے قریب سنائپر گن سے ایک فوجی ہلاک، جبکہ دوسرا زخمی ہوا۔

Related posts