جنوری 20, 2021

دعوت و کاروائیاں،دو ٹینک تباہ، 18 ہلاک، 54 سرنڈر

دعوت و کاروائیاں،دو ٹینک تباہ، 18 ہلاک، 54 سرنڈر

الفتح آپریشن کے سلسلے میں امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے لوگر اور غزنی صوبوں میں کٹھ پتلی فوجوں پر حملہ کیا، جب کہ تخار اور کنڑ صوبوں میں 54 سیکورٹی اہلکار مخالفت سے دستبردار ہوئے۔

اطلاعات کے مطابق سنیچر کےروز مغرب کے وقت صوبہ لوگر کے صدر مقام پل عالم شہر کے شیروازہ کے علاقے میں بم دھماکہ سے فوجی رینجر گاڑی تباہ اور اس میں سوار 5 اہلکار ہلاک ،جب کہ شہر کے قریب مجاہدین نے ایک فوجی کو قتل کردیا اور مغرب ہی کے وقت ضلع محمدآغہ کے سرخاب کے مقام پر جنگجوؤں کی گاڑی دھماکہ خیز مواد سے تباہ اور اس میں سوار 5 جنگجو لقمہ اجل بن گئے۔

صوبہ غزنی سے آمدہ رپورٹ کے مطابق عشاء کے وقت صدر مقام غزنی شہر کے قلعہ ازاد کے مقام پر پولیس چوکی پر حملے میں ایک اہلکار ہلاک، اسی وقت ضلع خواجہ عمری کے نو برجہ کے علاقے میں چوکی پر اسی نوعیت حملے میں ایک پولیس مارا گیا۔جب کہ ضلع گیلان کے گوڑچہ کے مقام پر مجاہدین نے پولیس گشتی پارٹی پر حملہ کیا، جس میں ظالم اہلکار بریت سمیت 3 اہلکار ہلاک ہوئے اور ضلع دہ یک کے تاسن کے علاقے میں بم دھماکہ سے فوجی ٹینک تباہ اور اس میں سوار اہلکاروں میں سے 3 ہلاک، 2 زخمی ہوئے۔

رپورٹ  کے مطابق کمیشن برائے دعوت و ارشاد امارت اسلامیہ کے عہدیداروں کی جدوجہد کے نتیجے میں صوبہ تخار ضلع نمک آب کے مختلف علاقوں میں کابل انتظامیہ کے 52 سیکورٹی اہلکاروں جب کہ صوبہ کنڑ ضلع وٹہ پور میں جنگجو کمانڈر سمیت 2 اہلکاروں نے حقائق کا ادرا ک کرتے ہوئے مخالفت سے دستبرداری کا اعلان کیا۔

Related posts