نومبر 29, 2020

دشمن فرار، چوکیاں فتح، 2 تباہ، 28 ہلاک، 13 سرنڈر

دشمن فرار،  چوکیاں فتح، 2 تباہ، 28  ہلاک، 13 سرنڈر

مجاہدین نے قندہار، زابل، ہلمند وہرات صوبوں میں چوکیوں وکٹھ پتلی فوجیوں پر حملہ کیا۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ زابل ضلع شاہ جوئی کے حسن کاریز میں واقع اہم یونٹ اور زیارت نامی چوکی کو اہلکار ہلاک ہوئے۔

رپوٹ کے مطابق سنیچر کے رات دو بجے کے لگ بھگ صوبہ قندہار ضلع بولدک کے قریب واقع چوکی پر حملہ ہوا، جس سے ایک چوکی فتح، 3 اہلکار ہلاک، 2 زخمی، جبکہ دیگر نے فرار کی راہ اپنالی۔

یاد رہے کہ مجاہیدن نے مختلف النوع فوجی سازوسامان غنیمت کرلیا۔

یاد رہے کہ دشمن کے فائرنگ سے 2 مجاہدین زخمی ہوئے۔

دوسری جانب سنیچر کے روز سہ پہر دو بجے کے لگ بھگ ضلع شاہ ولیکوٹ کے تور کوتل کے علاقے میں واقع 3 چوکیوں کو دشمن نے مجاہدین کے ممکنہ حملوں کی خوف سےچھوڑ کر فرار ہوا۔

دوسری جانب سنیچر کے روز صبح نو بجے کے لگ بھگ صوبائی دار الحکومت قندہار شہر کے حلقہ نمبر تین کے علاقے میں مسلحانہ کاروائی کے نتیجے میں ظالم جنگجو کمانڈر صالح محمد ہلاک ہوا۔

یاد رہے کہ دشمن کے فرار سے وسیع علاقے پر مجاہدین کا کنٹرول ہوا۔

اطلاع کے مطابق صوبہ ہرات ضلع غوریان کے مرکز میں واقع اینٹلی جنس اہلکاروں نے اہم مرکز چھوڑ کر فرار ہونے میں کامیاب ہوئے۔

آمدہ رپوٹ کے مطابق صوبہ ہلمند کے صدر مقام لشکرگاہ شہر کے حلقہ نمبر چار کے علاقے کے باباجی کے مقام پر سات پولیس اہلکار نوروز ولد خان اغا، روزی خان ولد محمد رسول، قدرت اللہ ولد عبد الستار اور حمید اللہ ولد سید گل، اغا شیرین ولد نور محمد، محمد ولی ولد لالی اور بریالی ولد محمد اخلاص نے مجاہدین کے سامنے ہتھیار ڈالے۔

آمدہ اطلاع کے مطابق جمعہ کے روز ایک جنگجو عبد المتین ولد شہاب الدین مجاہدین سے آملا۔

دوسری جانب ضلع گوسفندئی کے آق گومز کے علاقے میں ایک اور جنگجو حمد فرید ولد عیسی بھی مجاہدین سے آملا۔

ذرائع کے مطابق سنیچر کے روز صبح کے وقت صوبہ ہرات کے پشتون زرغون اور اوبئی اضلاع میں 3 جنگجو بسم اللہ ولد دلاور، عبد المجید ولد بوریابافل اور عبد الکبیر ولد عبد القادر نے مجاہدین کی مخالفت سے دست بردرای کا اعلان کیا۔

اسی طرح صوبہ ہلمند کے صدر مقام لشکرگاہ شہر کے گودر بالا کے علاقے میں سنیچر کے روز صبح کے وقت ایک پولیس اہلکار محمد ولد اسد اللہ ایک کلاشنکوف سمیت مجاہدین سے آملا

 

Related posts