اکتوبر 27, 2020

کمیشن برائے دعوت و ارشاد، 67 سیکورٹی اہلکار سرنڈر

کمیشن برائے دعوت و ارشاد، 67 سیکورٹی اہلکار سرنڈر

کمیشن برائے دعوت و ارشاد امارت اسلامیہ کے عہدیداروں کی جدوجہد کے نتیجے میں بلخ، نورستان، پکتیا، غزنی، میدان، اور جوزجان صوبوں میں کابل انتظامیہ کے 67 سیکورٹی اہلکاروں نے حقائق کا ادراک کرتے ہوئے مخالفت سے دستبرداری کا اعلان کیا۔

تفصیل کے مطابق صوبہ بلخ کے دس اضلاع میں گذشتہ ایک ہفتہ دوران کابل انتظامیہ کے 61 سیکورٹی اہلکاروں نے حقائق کا ادراک کرتے ہوئے مخالفت سے دستبرداری کا اعلان کیا۔

اسماء کی فہرست پڑھنے کے لیے یہاں  کلک کیجیے۔

رپورٹ کے مطابق صوبہ نورستان ضلع واماء  میں 2 سیکورٹی اہلکار اشرف خان ولد پیرمحمد اور محمددین ولد نورمحمد، صوبہ جوزجان ضلع مردیان میں ایک جنگجو محمد موسی ،جب کہ صوبہ میدان کے بندچک اور سیدآباد اضلاع میں 2 سیکورٹی  اہلکار روح اللہ ولد گل آغا اور مختار ولد نورجان، اسی طرح صوبہ پکتیا  ضلع احمدخیل میں پولیس اہلکار نظرمحمد ولد پھٹان اور صوبہ غزنی ضلع دہ یک میں پولیس اہلکار محمد ایوب ولد عبدالجبار نے حقائق کا ادراک کرتے ہوئے مخالفت سے دستبرداری کا اعلان کیا۔

Related posts