اگست 08, 2020

بادغیس،فاریاب، کمانڈر قتل، 12 اہلکار سرنڈر

بادغیس،فاریاب، کمانڈر قتل، 12 اہلکار سرنڈر

کمیشن برائے دعوت و ارشاد امارت اسلامیہ کے کارکنوں کی جدوجہد کے نتیجے میں بادغیس، فاریاب اور صوبوں میں 12 اہلکار مجاہدین سے آملے، جب کہ دشمن پر حملے بھی ہوئے۔

آمدہ اطلاعات کے مطابق جمعرات ارو جمعہ کی درمیانی شب صوبہ بادغیس ضلع آب کمری کے مرکز کے  قریب گل خانہ کے علاقے میں مجاہدین نے فوجی کمانڈر عبدالحکیم کو قتل کردیا،جب کہ ان کا محافظ زخمی ہوا اور مجاہدین ن ےایک کلاشنکوف، ایک وائرلیس سیٹ بھی قبضے میں لیا۔

دوسری جانب کمیشن برائے دعوت و ارشاد کے کارکنوں کی جدوجہد کے نتیجے میں سنگ آتش، قادس اور آب کمری اضلاع میں 10 سیکورٹی اہلکاروں اسماعیل ولد عبدالقدوس، عبدالجلیل ولد حاجی یوسف، محبوب ولد عبدالمقصود، محمدجمعہ ولد محمد سرور، احمدولد عبدالرزاق، عبدالظاہر ولد محمد حیدر اور تین دیگر فوجیوں نے حقائق کا ادراک کرتے ہوئے مجاہدین سے آملے،جنہوں نے 3 کلاشنکوفیں بھی مجاہدین کے حوالے کردیا۔

اسی طرح صوبہ فاریاب ضلع قیصار کے مرکز میں جنگجوؤں کی باہمی لڑائی میں 2 جنگجو زخمی ہوئے اور ارزدیک کے رہائشی نام نہاد قومی لشکر کے جنگجو سراج ولد عبدالرؤف مجاہدین سےآملے، جنہوں نے ایک کلاشنکوف اورایک وائرلیس سیٹ مجاہدین کے حوالے کردیا، جب کہ صوبہ فراہ کے صدرمقام فراہ شہر کے ریگی کے باشندے سیکورٹی اہلکار امرالدین ولد ضیاؤالدین نے مجاہدین کے سامنے ہتھیار ڈال دیے، جنہوں نے ایک کلاشنکوف بھی مجاہدین کے حوالے کردیا۔

Related posts