فروری 17, 2020

دعوت و حملے،دس ٹینک و گاڑیاں تباہ، 23 ہلاک، 24 سرنڈر

دعوت و حملے،دس ٹینک و گاڑیاں تباہ، 23 ہلاک، 24 سرنڈر

الفتح آپریشن کے سلسلے میں امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے بلخ،بغلان، لغمان، جوزجان،غزنی، پروان، کاپیسا اورقندوز صوبوں میں نشانہ بنایا، جب کہ صوبہ بلخ میں 24 سیکورٹی اہلکار مجاہدین سے آملے۔

تفصیل کے مطابق منگل کےروز شام کے وقت صوبہ بلخ ضلع چاربولک کے لبک، اوزلوک اور گورتپہ کے علاقے میں فوجی مراکز پر حملوں اور دھماکوں سے دو ٹینک ،ایک گاڑی تبا ہونے کے علاوہ 2 اہلکار قتل،جب کہ ضلع چمتکل کے مرکز کے قریب حملے میں ایک فوجی ہلاک اور ضلع خاص بلخ کے بنگلیہ کے علاقے میں فوجی بیس پر ہونے والے حملے میں 2 اہلکار ہلاک ہوئے۔

دوسری جانب کمیشن برائے دعوت وارشاد کے کارکنوں اور قبائلی عمائدین کی جدوجہد کے نتیجے میں زارع، کلدار، شولگرہ اور خاص بلخ اضلاع میں 24 سیکورٹی اہلکاروں نے حقائق کا ادراک کرتے ہوئے مخالفت سے دستبردار ہوئے،جن میں عبدالقادر ولد جمعہ مراد، احمدخان ولد ملاعبدالشکور، محمدامین ولد کریم بردی، عبدالرزاق ولد عبدالستار، عبدالظاہر ولد عبدالصمد، روزمراد ولد عبدالرحمن، نعمت اللہ ولد نیازگل، اقمر داد ولد عبدالجبار، مہراللہ ولد خال محمد، محمدصالح ولد عبدالستار، ناصر ولد غائب، عبداللہ ولد قلی، روزمحمد ولد اللہ نظر، محمدکریم ولد نظر، روزتردی ولد خال نظر، محمداسماعیل ولد کمال، موسی ولد عورض قلی، محمد اسلم ولد محمدمراد، نظرمحمد ولد محمداکبر، زین اللہ ولد محمدعالم، محمدشکور ولد باباخان، عبدالجبار ولد سعید، عبدالجلیل ولد عبدالغفور اور عبدالغنی ولد عبدالقادر شامل ہیں۔

رپورٹ کے مطابق منگل کےروز صوبہ بغلان ضلع مرکزی بغلان کے جرخشک کے علاقے میں فوجی کاروان پر ونے والے حملے میں دو ٹینک اور ایک گاڑی تباہ ہونے کے علاوہ دشمن کو ہلاکتوں کا سامنا بھی ہوا اور مجاہدین نے ایک کلاشنکوف بھی قبضے میں لیا، جب کہ رات کے وقت ضلع نہرین کے شہرکہنہ کے علاقے میں  مقامی جنگجوؤں کے درمیان چھڑنے والی لڑائی صبح تک جاری رہی، جس کے نتیجے میں 4 اہلکار ہلاک ہوئے۔

رپورٹ کے مطابق منگل کےروز مغرب کے وقت صوبہ لغمان ضلع دولت شاہ کے گواگوڑو کے علاقے میں مجاہدین کے حملے میں ایک فوجی مارا گیا ،جب کہ بدھ کےروز صبح کے وقت الوکو کے علاقے میں جنگجوؤن کی چوکی پر حملے کے دوران جنگجو کمانڈر جمعہ شدید زخمی ہوا اور رات گئے ضلع علینگار کے چینچار پل کے مقام پر چوکی پر حملے میں ایک ٹینک تباہ ہونے کے علاوہ 3 اہلکار ہلاک، 4 زخمی ہوئے اور اسی طرح بدھ کے روز دوپہر کے وقت صدر مقام مہترلام شہر کے کوتلک کے علاقے میں بم دھماکہ سے ایک جنگجو ہلاک جب کہ دوسرا زخمی ہوا۔

اسی طرح پیرکےروز شام کے وقت صوبہ غزنی ضلع شلگر کے یرگٹو کے علاقے میں فوجی کاروان پر ہونے والے حملے میں دو ٹینک تباہ ہونے کے علاوہ 3 اہلکار ہلاک جب کہ 4 زخمی ہوئے اور رات کے وقت صدر مقام غزنی شہر کے شہباز کے علاقے میں چوکی پر ہونے والے حملے میں 4 فوجی لقمہ اجل بن گئے۔

نیز بدھ کےروز دوپہرکے وقت صوبہ جوزجان ضلع منگجیک کے مربوطہ علاقے میں بم دھماکہ سے فوجی ٹینک تباہ اور اس میں سوار اہلکار ہلاک و زخمی ہوئے۔

ذرائع کے مطابق منگل کےروز مغرب کے وقت صوبہ پروان ضلع شینوار کے گنبد بیخ کے علاقے میں مجاہدین کے حملے میں 2 فوجی زخمی ہوئے اور عشاء کے وقت صوبہ پکتیا ضلع زرمت کے مقرب خیل کے علاقے میںچوکی پر ہونے والے حملے میں 3 پولیس اہلکار ہلاک و زخمی ہوئے۔

رپورٹ کے مطابق منگل اور بدھ کی درمیانی شب صوبہ قندوز کے صدر  مقام قندوز شہر کے بالاحصار نامی فوجی مرکز پر مجاہدین نے میزائل داغے، جو اہداف پر گر کر دشمن کے لیے جانی و مالی نقصانات کے سبب بنے۔

دریں اثناء صوبہ کاپیسا ضلع نجرآب کے افغانیہ درہ کے علاقے نظام خیل کے مقام پر مجاہدین کے حملے میں ایک جنگجو زخمی ہوئے۔

Related posts