فروری 17, 2020

بلخ،پروان وجوزجان،ٹینک گاڑی تباہ،ہلاکتیں،2سرنڈر

مقامی جنگجوؤں اور کٹھ پتلی فوجوں پر امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے صوبہ بلخ میں حملہ کیا، جب کہ پروان اور جوزجان صوبوں میں 2 اہلکار مخالفت سےدستبردار ہوئے۔

اطلاعات کے مطابق منگل کے روز دو پہر کے وقت صوبہ بلخ ضلع خاص بلخ کےباب یوسف کے علاقے میں مجاہدین نے جنگجو کمانڈر طوفان کی گاڑی پر حملہ کیا،جس میں 2 شرپسند زخمی،گاڑی تباہ ہوئی اور سہ پہر کے وقت  بوکہ کے علاقے میں مجاہدین نے فوجی کاروان پر حملہ کیا،جس میں ایک ٹینک تباہ اور اس میں سوار اہلکار ہلاک و زخمی ہوئے، جب کہ شام کے وقت مرگین تپہ کے علاقے میں فوجی بیس پر حملے میں ایک فوجی مارا گا۔

رپورٹ کے مطابق پیر کےروز صوبہ پروان ضلع کوہ صافی کے منڈیقول درہ کے علاقے میں افغان فوجی مؤمن ولد رحیم خان اور صوبہ جوزجان ضلع قرقین کے کوک کے باشندے نام نہاد قومی لشکر کے جنگجو محمد چار ولد رحمان نظر نے حقائق کا ادراک کرتے ہوئے مخالفت سے دستبردار ہوئے۔

Related posts