اگست 03, 2020

فورسزپر مجاہدین کے حملے،ٹینک گاڑیاں تباہ، 44 ہلاک و زخمی

فورسزپر مجاہدین کے حملے،ٹینک گاڑیاں تباہ، 44 ہلاک و زخمی

سیکورٹی فورسز پر امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے بدخشان، لغمان، بلخ، ننگرہار اور کابل صوبوں میں حملہ کیا۔

اطلاعات کے مطابق ومنگل کے روز صبح کے وقت صوبہ بدخشان ضلع جرم کے آب خوردہ کے علاقے میں بم دھماکہ سے فوجی رینجر گاڑی تباہ اور اس میں سوار اہلکاروں میں سے 6 موقع پر ہلاک جب کہ پل علی مغلا چوکیوں کے جنرل کمانڈر سمیت 3 شدید زخمی ہوئے۔

رپورٹ کے مطابق پیر اور منگل کی درمیانی شب صوبہ لغمان ضلع علیشنگ کے قلعہ کٹہ کے علاقے میں مجاہدین نے پولیس چوکی اور تازہ دم اہلکاروں پر حملہ کیا،جس کے نتیجے میں 6 اہلکار ہلاک ، 3 زخمی اور ایک ٹینک بھی تباہ ہوا اور رات گئے ضلع دولت شاہ کے موار کے علاقے میں چوکی پر لیزرگن حملے کے دوران حسین نامی جنگجو ہلاک اور ایک جنگجو زخمی ہوا۔

صوبہ بلخ سے موصولہ رپورٹ کے مطابق پیرکےروز شام کے وقت ضلع چاربولک کے ازولوک کے علاقے میں مجاہدین کے حملے میں ایک ٹینک تباہ ہونے کے علاوہ اس میں سوار 5 اہلکار ہلاک و زخمی ہوئے اور شام ہی کے وقت ضلع خاص بلخ کے شہاب،مرگین تپہ اور بنگلیہ کے علاقوں میں فوجی مراکز پر ہونے والے حملوں میں 2 اہلکار ہلاک، ایک زخمی ہوا، جب کہ پیر کےروز شام کے وقت ضلع چمتال کے مرکز کے قریب فوجی کاروان پر ہونے والے حملے میں ایک گاڑی تباہ ہونے کے علاوہ ایک فوجی زخمی ہوا اور  منگل کےروز سہ پہر کے وقت مذکورہ مقام پر مجاہدین کے حملے میں ایک کمانڈو ہلاک اور ایک زخمی ہوا۔

رپورٹ کے مطابق پیر کےروز مغرب کے وقت صوبہ ننگرہار ضلع بٹی کوٹ کے نواقل کےعلاقے سپین خوڑ کے مقام پر بم دھماکہ سے ایک جنگجو ہلاک، 2 زخمی او ران کی گاڑی تباہ ہوئی اور عشاء کے وقت ضلع بہسود کے ثمرخیل پاٹک کے قریب مجاہدن نے کمانڈو پر حملہ کیا،جس میں  2 وحشی ہلاک ہوئے جب کہ منگل کےروز سہ پہر کے وقت ضلع مہمنددرہ کے غوڑکی کے علاقے میں مجاہدین کے حملے میں 2 فوجی ہلاک، 3 زخمی اور ایک ٹینک بھی تباہ ہوا۔

دوسری جانب پیرکےروز دوپہر سے قبل صوبہ کابل ضلع سروبی کے کلمہ پوستہ کے علاقے کابل-جلال آباد ہائی وے پر مجاہدین نے فوجی گاڑیوں پر حملہ کیا،جس میں 3 اہلکاروں کو ہلاکتوں کا سامنا ہوا۔

Related posts